پاکستان

راولپنڈی: ذہنی مریض نے اپنے ہی اہلخانہ کو یرغمال بنالیا، فائرنگ سے ایک شخص جاں بحق

شیئر کیجئے

راولپنڈی: پولیس نے مورگاہ آفیسر کالونی میں اہلخانہ کو یرغمال بنانے والے ذہنی مریض کو گرفتار کرتے ہوئے تمام افراد کو بازیاب کرالیا ہے۔ ذہنی مریض کی فائرنگ سے ایک شخص جاں بحق بھی ہوا۔

راولپنڈی کے علاقے مورگاہ آفیسر کالونی میں عبد الرحیم نامی ذہنی مریض نے گذشتہ رات سے اہلخانہ کو یرغمال بنا رکھا تھا۔ پولیس اور اہل علاقہ کے مطابق گھر والوں کو یرغمال بنانے والا شخص نشے کا عادی تھا۔

واقعے کی اطلاع ملنے پر پولیس فوری طور پر جائے وقوعہ پر پہنچی اور گھر میں داخل ہونے کی کوشش کی تو مسلح شخص نے پولیس پر فائرنگ کردی، جس کے نتیجے میں راہ گیر اور پولیس اہلکار شدید زخمی ہوگئے۔ دونوں زخمیوں کو پمز اسپتال منتقل کیا گیا جہاں پچاس سالہ اکبر نامی شخص دوران علاج دم توڑ گیا۔

پولیس کے مطابق یرغمال افراد کی تعداد بیس سے زائد ہے جبکہ ایک بچہ گھر کی نچلی منزل سے بھاگ نکلنے میں کامیاب ہوا، جسے محفوظ مقام پر منتقل کیا۔
واقعے کے بعد سی پی او راولپنڈی جائے وقوعہ پر پہنچے اور پولیس کو بھرپور کارروائی کا حکم دیا۔ بعد ازاں پولیس اور ایلیٹ فورس نے گھر میں داخل ہوتے ہوئے ذہنی معذور شخص کو حراست میں لیتے ہوئے گھر کے تمام افراد کو بازیاب کرالیا۔

اس موقع پر سی پی او راولپنڈی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ تمام یرغمالیوں کو بحفاظت بازیاب کرالیا ہے، جبکہ گھر میں موجود مسلح شخص کی فائرنگ سے ایلیٹ فورس کے دو اہلکار زخمی ہوئے، جن کی حالت خطرے سے باہر ہے۔

loading...

متعلقہ مضامین

Close
Close